Advantages of Prayer Offered in Time

فضل الصلاۃ علی وقتھا

Advantages of Prayer Offered in Time

وقت پر نماز پڑھنے کی فضیلت


Hadith about Timing of Prayers (Salah) with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 496:-  Rafeh bin Kadeej (Radi Allah o anho) narrates that, he has listened the Apostle’s ﷺ saying, “Brighten the dawn (for offering salah), verily, it is the greatest regrading the rewards.” Abu Eesa (Imam Tirmizi) said, “Hadith of Rafeh bin Khdeej (Radi Allah o anho) is good and correct” Abu Eesa (Imam Tirmizi) said, “This hadeeth is good (and) correct”, and narrated Tirmizi at no 154, Sheikh Albani said, “Correct”, and Annisay at no 548 in short words, and Sheikh Albany said, “Good (and) correct” , and at no 549, Sheikh Albany said, “With correct chain of narrators”, and Ibn e Haban at no 1490, Shoaib Alurnwoot said, “Hadith is correct“, and at 1491, Shoaib Alurnwoot said, “Chain of narrators is correct”, and Abu Dawood at no 424, Sheikh Albany said, “Good (and) correct”.

عن ابی عَمْرٍو الشَّيْبَانِيَّ يَقُولُ حَدَّثَنَا صَاحِبُ هَذِهِ الدَّارِ وَأَشَارَ إِلَى دَارِ عَبْدِ اللَّهِ قَالَ سَأَلْتُ النَّبِيَّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ أَيُّ الْعَمَلِ أَحَبُّ إِلَى اللَّهِ قَالَ الصَّلَاةُ عَلَى وَقْتِهَا قَالَ ثُمَّ أَيٌّ قَالَ ثُمَّ بِرُّ الْوَالِدَيْنِ قَالَ ثُمَّ أَيٌّ قَالَ الْجِهَادُ فِي سَبِيلِ اللَّهِ….رواہ البخاریؒ برقم 496، 5513 والمسلمؒ برقم 122 والنسائیؒ برقم 610 و الترمذیؒ برقم 170 عن ام فروۃ رضی اللہ عنھا مختصرا وفی روایاتہما قال الشیخ البانیؒ صحیح۔ واحمدبن حنبلؒ برقم 3890 تعليق شعيب الأرنؤوط : إسناده صحيح على شرط الشيخين۔

ترجمہ۔ 496 ابوعمرو الشیبانیؒ کہتے ہیں کہ ہم سے اس گھر کے مالک نے حدیث بیان کی اور اشار کیا عبداللہ (بن مسعود رضی اللہ تعالیٰ عنہ)کے گھر کی طرف ، کہا کہ پوچھا میں نے نبی ﷺ سے کہ کونسا عمل سب سے زیادہ پسندیدہ ہے اللہ کے ہاں؟ تو ارشاد فرمایا، ” نماز ادا کرنا اس کے وقت ہوجانے پر” ، عرض کی پھر کونسا (عمل) ہے؟ ارشاد فرمایا، ” حسن سلوک کرنا والدین کے ساتھ”، عرض کی پھر کونسا ہے؟ ارشاد فرمایا جہاد کرنا اللہ کے راستے میں” ، ….روایت کی ہے البخاریؒ نے نمبر 496، 5513 پر اور المسلمؒ نے 122 پر اورالنسائیؒ نے نمبر 610 پر اور الترمذیؒ نے نمبر 170 پر ام فروۃ رضی اللہ عنھا سے مختصر الفاظ سے اوردونوں کی روایات کے بارے کہاالشیخ البانیؒ نے صحیح ہے ، اوراحمدبن حنبلؒ نے نمبر 3890 پر تعليق شعيب الأرنؤوط کی ہے کہ اسناد اس کی صحیح ہےشيخين (بخاریؒ ومسلمؒ ) کی شرط پر۔

 

Related Topics:

Virtues of Friday Prayer (Salatul Jumuah)

Etiquettes of Friday Prayer (Salatul Jumuah)

Purification of Clothes is Obligatory for Prayer

Can an Adult Woman Perform Prayer without Covering

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *