Ghusl Janabat for Female with Braided Hair

ذكر ترك المرأة نقض ضفر رأسها عند اغتسالها من الجنابة

Braided Hair are not Necessary to Untie for Bath (Ghusl) Janabat

غسل جنابت کے لئے خواتین کے بال نہ کھولنا


1st Hadith about Bath(Ghusl) with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 497: It is narrated from Umme Salmah (Radi Allah o anha) that she said, “I asked, O, Rasoolullah, I am a woman braided her hair tightly. Should I untie my hair for bath of Janabat (after sexual gathering with husband)”. He answered, “No, only pouring water full of (both) hands thrice upon your head is sufficient, then dispense water upon (whole body) you, so you are purified.” (Narrated Muslim and Tirmizi at no 105, and Nisay at no 241, and Ibn e Majah at no 603 and Abu Dawood at no 251 and about all four Sheikh Albany said, “Correct”, and Abu Yala at no 6957 Hussain Salim Asad said, “Chain of narrators is correct“.

عَنْ أُمِّ سَلَمَةَ قَالَتْ قُلْتُ يَا رَسُولَ اللَّهِ إِنِّي امْرَأَةٌ أَشُدُّ ضَفْرَ رَأْسِي فَأَنْقُضُهُ لِغُسْلِ الْجَنَابَةِ قَالَ لَا إِنَّمَا يَكْفِيكِ أَنْ تَحْثِيَ عَلَى رَأْسِكِ ثَلَاثَ حَثَيَاتٍ ثُمَّ تُفِيضِينَ عَلَيْكِ الْمَاءَ فَتَطْهُرِينَ (رواہ مسلمؒ والترمذیؒ برقم 105 والنسائیؒ برقم 241 وابن ماجہؒ برقم 603 وابوداودؒ برقم 251 وفی اصحاب الاربعۃ قال الشیخ البانیؒ صحیح وابویعلیؒ برقم 6957 قال حسین سلیم اسد اسنادہ صحیح

ترجمہ۔ 497 – ام سلمۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہا) سے روایت ہے، کہا کہ، “میں نے عرض کی یا رسول اللہ () بے شک میں ایسی خاتون ہوں کہ مضبوطی سے سر پر چوٹی باندھتی ہوں، تو کیا میں اس کو کھولا کروں غسل جنابت کے لئے؟ ارشاد فرمایا نہیں آپ کے لئے صرف اتناکافی ہے کہ اپنے سر پر تین دفعہ چلو بھر کے پانی ڈال دو اور پھر اپنے (سارے بدن) پر پانی بہادو پس آپ پاک ہوجائیں گی ” (روایت کی ہے مسلمؒ نے اورالترمذیؒ نے نمبر 105 پراورالنسائیؒ نے نمبر 241 پراورابن ماجہؒ نے نمبر 603 پر اورابوداودؒ نے نمبر 251 پر اورچاروں کے بارے میں کہا الشیخ البانیؒ کہ صحیح ہے اورابویعلیؒ نے نمبر 6957 پر ، کہا حسین سلیم اسد نے اسناداس کہ صحیح ہے


2nd Hadith about Bath(Ghusl) with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 500: Aysha (Radi Allah o anha) narrates that, “….Until the water penetrate through the roots of the hair, then she should pour water upon her body….. (Narrated Al-Muslim and Abu Dawood at no 314 Sheikh Albany said, “Good and Correct”, and Ahmad bin Hanbal at no 25188, 25592 and about both Taleek of Shoaib Alurnwoot is, “Hadith is correct“.

 عَنْ عَائِشَةَ…. حَتَّى تَبْلُغَ شُؤُونَ رَأْسِهَا ثُمَّ تَصُبُّ عَلَيْهَا الْمَاءَ ۔۔۔۔(رواہ المسلمؒ وابوداودؒ برقم 314 قال الشیخ البانیؒ حسن صحیح، واحمد بن حنبلؒ برقم 25188، 25592 وفی کلیہما تعلیق شعیب الانؤوط، حدیث صحیح

ترجمہ۔ 500 – عائشۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہا) سے روایت ہے کہ …. یہاں تک کہ (پانی )اس کے سر (کے بالوں) کی جڑوں تک پہنچ جائے”۔۔۔۔ (روایت کی ہے المسلمؒ نے اورابوداودؒ نے نمبر 314 پر کہا الشیخ البانیؒ نے حسن صحیح ہے، اوراحمد بن حنبلؒ نےنمبر 25188، 25592 پر اور دونوں کے بارے تعلیق شعیب الانؤوط کی ہے، حدیث صحیح ہے

Related Topics:

When Bath Becomes Obligatory

Taking Bath on Seminal Emission

The Sexually Discharge Spoils Stored Water

Take A Bath After Menstruation Period in Islam

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *