How To Wash Seminal Fluid

الاغتسال من الجنابۃ

Washing of Seminal Fluid

منی کا دھونا


1st Hadith about Seminal Fluid with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 222: It is narrated that Ayesha (Radi Allah o anha) said, “I used to wash the seminal material from the clothing of Rasoolullah, ﷺ and he go to offer salat, remain the signs of water (after washing) .” (Narrated Bukhari and at no 223, 224, 225 and Annisay at no 295 and Sheikh Albany said, “Correct“.

عن عائشة قالت كنت أغسل الجنابة من ثوب النبي صلى الله عليه وسلم فيخرج إلى الصلاة وإن بقع الماء في ثوبه ۔(رواہ البخاریؒ وبرقم 223، 224، 225 والنسائیؒ برقم 295 قال الشيخ الألبانيؒ : صحيح)۔

ترجمہ۔ 222عائشۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہا) سے روایت ہے کہا،کہ، ” میں نبی ﷺ کے کپڑے سے جنابت (منی) دھویا کرتی ، اور آپ تشریف لے جاتے نماز کو کہ باقی رہ جاتا پانی کا نشان آپ کے (مبارک ) کپڑوں میں” ۔(روایت کی ہے البخاریؒ نے اور نمبر 223، 224، 225 پر اورالنسائیؒ نے نمبر 295پر، اورکہا الشيخ الألبانیؒ نے صحيح)۔


2nd Hadith about Seminal Fluid with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 540: It is narrated from Muawiyah bin Sufyan (Razi Allah o anho) asked from his sister Umme Habiba (Razi Allah o anho) the wife of Rasoolullah, ﷺ, “Has he (Rasoolullah, ﷺ ) been offering salat in the same clothing, in which he used to copulate with his wives?. She answered, “Yes, when it (clothing) was not bearing contamination (Seminal Fluid).” (Explanation , “when it was not bearing contamination” means seminal material) .Narrated Ibn e Majah and Abu Dawood at no 366 and Annisay at no 294 and about all Sheikh Albany said, “Correct”, and Ahmad bin Hanbal at no 26803 with text, “Did Rasoolullah ﷺ offer salat in same clothing in which he used to sleep with you? She answered, “Yes, when it (clothing) was not contaminated. (with seminal material)” and Taleek of Shoaib Alurnwoot is, “Hadith is correct” and at no 2744 and Taleek of Shoaib Alurnwoot is, “Chain of narrators are correct“, and Abu Yaala at no 7126 and Hussain Salim Asad said, “Chain of narrators are correct”.

عن معاوية بن أبي سفيان أنه سأل أخته أم حبيبة زوج النبي صلى الله عليه و سلم۔ : – هل كان رسول الله صلى الله عليه و سلم يصلي في الثوب الذي يجامع فيه ؟ قالت نعم . إذا لم يكن فيه أذى [ ش ( إذا لم يكن فيه أذى ) أي أثر المني ] . ۔ رواہ ابن ماجہؒ وابوداودؒ برقم 366، والنسائیؒ برقم 29 ،وفی الثلاثۃ قال الشيخ الألباني : صحيح واحمدبن حنبلؒ برقم 26803،بلفظ أكان رسول الله صلى الله عليه و سلم يصلي في الثوب الذي ينام معك فيه قالت نعم ما لم ير فيه أذى و تعليق شعيب الأرنؤوط : حديث صحيح وبرقم 27444 و تعليق شعيب الأرنؤوط : إسناده صحيح وابویعلیؒ برقم 7126 و قال حسين سليم أسد : إسناده صحيح۔

ترجمہ۔ 540 – معاویۃ بن سفیان (رضی اللہ تعالیٰ عنہ) سے روایت ہےکہ بے شک انہوں نے سوال کیا اپنی بہن ام حبیبۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہا) روجہ نبی ﷺ سے کہ “کیا رسول اللہ ﷺ نمازپڑھتے تھے اس کپڑے میں جس میں وہ (اپنی ازواج کے ساتھ) ہم بستری فرماتے تھے؟ کہا ہاں ، جب اس میں کوئی ناپاکی نہ لگی ہوتی تو (اس میں نماز ادا فرمالیتے)”۔ (شرح ، جب اس (کپڑے) میں (آذی) ناپاکی نہ ہوتی یعنی منی کا اثر نہ ہوتا)روایت کی ہے ابن ماجہؒ نے اورابوداودؒ نے نمبر 366پر اور النسائی نے نمبر 294 پر اور سب کے بارے میں کہا الشیخ البانیؒ نے کہ صحیح ہے اوراحمدبن حنبلؒ نے نمبر 26803، پر ان الفاظ سے، “کیا رسول اللہ ﷺ نمازادافرماتے اسی کپڑے میں جس میں وہ آپ کی ساتھ سوجاتے تھے؟ کہاہاں، جب اس میں ناپاکی نہ لگی ہوتی۔”۔اور تعليق شعيب الأرنؤوط کی ہے کہ حديث صحيح ہے اورنمبر 27444 اور تعليق شعيب الأرنؤوط کی ہے إسناداس کی صحيح ہے اور ابویعلیؒ نے نمبر 7126 پر اور کہا حسين سليم أسد نے إسناداس کی صحيح ہے۔


3rd Hadith about Seminal Fluid with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No 27: And it is narrated through Ayesha (Radi Allah o anha) that she said, “Rasoolullah, ﷺ used to wash seminal fluid (from his clothes) then he go to offer salat in this clothe, I watch the signs of water (after washing).” (Buloogh al Maraam) Al-hafiz (Ibn e Hajar) said , “agreed upon” (Both Bukhari and Muslim has narrated this hadith)

وَعَنْ عَائِشَةَ رَضِيَ اَللَّهُ عَنْهَا, قَالَتْ: – كَانَ رَسُولُ اَللَّهِ – صلى الله عليه وسلم – يَغْسِلُ اَلْمَنِيَّ, ثُمَّ يَخْرُجُ إِلَى اَلصَّلَاةِ فِي ذَلِكَ اَلثَّوْبِ, وَأَنَا أَنْظُرُ إِلَى أَثَرِ اَلْغُسْلِ فِيهِ – (بلوغ المرام) قال الحافظؒ مُتَّفَقٌ عَلَيْه ۔

ترجمہ – 27اور عائشۃ رضی اللہ تعالیٰ عنہا سے روایت ہے کہاکہ ” رسول اللہ ﷺ (کپڑے میں لگی) منی کو دھوتے پھر تشریف لے جاتے نماز کو اسی کپڑے میں ، اور میں دیکھ رہی ہوتی اس میں (پانی سے) دھونے کے اثر کو”: – (بلوغ المرام) الحافظ (ابن حجرؒ) نے کہا کہ یہ (حدیث) متفق علیہ (بخاریؒ ومسلمؒ دونوں نے روایت کی) ہے۔

 

Related Topics:

Wash All Organs Three Times During Ablution

Wash Pre-Seminal Fluid and Make an Ablution

Small Area Leftover From Washing During Ablution

Sperm is Contamination

Taking Bath on Seminal Emission

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *