Interpretation of hadith by Sahaba, No Salat without Reciting of Surah Fatiha

تاویل الصحابی ، لا صلاة لمن لم يقرأ بفاتحة الكتاب

Interpretation of hadith by Sahaba, No Salat without Reciting of Surah Fatiha

اس کی نماز نہیں جو فاتحہ نہ پڑھے کی تاویل صحابی رسول ﷺ سے


1st Hadith in English, Urdu & Arabic


Ubadah ibn As-Samit (Razi Allahu Anhu) narrates that Holy Prophet ﷺ said, “There is no salat for him, who did not recite Fatiha.” (Sahih Bukhari)

حَدَّثَنَا عَلِىُّ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ قَالَ حَدَّثَنَا سُفْيَانُ قَالَ حَدَّثَنَا الزُّهْرِىُّ عَنْ مَحْمُودِ بْنِ الرَّبِيعِ عَنْ عُبَادَةَ بْنِ الصَّامِتِ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ – صلى الله عليه وسلم – قَالَ « لاَ صَلاَةَ لِمَنْ لَمْ يَقْرَأْ بِفَاتِحَةِ الْكِتَابِ »(بخاریؒ)۔

ترجمہ۔  عبادۃ بن الصامت( رضی اللہ تعالیٰ عنہ ) سے روایت ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا،اس کی نماز نہیں (جو نماز میں) فاتحہ نہ پڑھے ۔ (بخاریؒ


2nd Hadith in English, Urdu & Arabic


312: And Ahmad bin Hanbal interpreted the hadith of Holy Prophet ﷺ , “There is no salat for him, who did not recite Fatiha.” (means) when he is alone, and augmented with hadith of (narrated by) Jabir bin Abdullah (Radi Allaho Anho) as he said, “Who offered rakat (a single part of salat) and did not recite Fatiha, he did not offer any thing (useless) except behind imam.” Ahmad (bin Hanbal) said, “He is a man out of companions of Holy Prophet ﷺ who interpreted the hadith of Holy Prophet ﷺ , “There is no salat for him, who did not recite Fatiha, (means) certainly, when he is alone.” (Tirmizi)

وأما أحمد بن حنبل فقال معنى قول النبي صلى الله عليه و سلم لا صلاة لمن لم يقرأ بفاتحة الكتاب إذا كان وحده ، واحتج بحديث جابر بن عبد الله حيث قال من صلى ركعة لم يقرأ فيها بأم القرآن قلم يصل إلا أن يكون وراء الإمام ، قال أحمد [ بن حنبل ] فهذا رجل من أصحاب النبي صلى الله عليه و سلم تأول قول النبي صلى الله عليه و سلم لا صلاة لمن لم يقرأ بفاتحة الكتاب أن هذا إذا كان وحده ۔(ترمذیؒ

ترجمہ۔  اور احمد بن حنبلؒ جو ہیں ،فرمایا کہ اس قول نبی ﷺ( نماز نہیں ہوئی اس کی جو نماز پڑھے اور فاتحہ نہ پڑھے”) کا معنی یہ ہےکہ جب وہ اکیلا (پڑھنے والا) ہو۔اور حجت پکڑی ہے جابر بن عبد اللہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی حدیث سے کہ یوں کہاکہ جس نے رکعت پڑھی اور اس میں فاتحہ نہیں پڑھی تو اس کی نماز نہ ہوئی مگر یہ کہ امام کے پیچھے ہو ۔احمد بن حنبل ؒ نے کہا پس یہ شخص ہے نبیﷺ (کے اصحاب میں سے جس نے تاٗویل کی قول نبی ﷺ کی کہ نماز نہیں ہوتی جس نے فاتحہ نہیں پڑھی کہ یہ جب ہے جب وہ نمازی اکیلا ہو ۔ (سنن ترمذیؒ)۔ 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *