Leftover (Leavings or Saliva) of a Dog is Contaminated

اذا ولغ الکلب فی الاناء فلیغسلہ سبع مرات

Leftover (Leavings or Saliva) of a Dog is Contaminated

کتے کا جھوٹا ناپاک ہے


Hadith about Dog Saliva with Translation in English, Urdu & Arabic


Hadith No-420: Abu Hurairah (Radi Allahu anhu) narrates that Rasoolullah ﷺ said, “Cleaning of a utensil, when a dog puts his mouth in it, is washing of utensil seven times, first one will be with soil (as a detergent).” (Al-Muslim and hadith no 419 also) and narrated also Al-bukhari,at no 176 and Ibn e Haban at no 1297 and Shoaib Alurnwoot said, “Chain of narrators is correct as per criteria of both Sheikhs (Bukhari and Muslim)”, and at no 1295 and Shoaib Alurnwoot said, “Correct”, and Al Hakim in Al Mustarik at no 596 and added, “A cat is like it (dog, so utensil should be washed seven times)”, and said, “The chain of narrators of this hadith is correct as per criteria of both Sheikhs (Bukhari and Muslim)”, and Taleek of Ashby is, “As per criteria of both (Bukhari and Muslim), and Ahmad bin Hanbal at no 8597, 20585 and about both Taleek of Shoaib Alurnwoot is, “Chain of narrators is correct as per criteria of both Sheikhs (Bukhari and Muslim)”, and Annisay at no 66, 67 and about both Sheikh Albani said, “Correct”, and Attirmizi at no 91 and said, “Good and correct”, and Sheikh Albany said, “Correct”.

عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ قَالَ،قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ طَهُورُ إِنَاءِ أَحَدِكُمْ إِذَا وَلَغَ فِيهِ الْكَلْبُ أَنْ يَغْسِلَهُ سَبْعَ مَرَّاتٍ أُولَاهُنَّ بِالتُّرَابِ،۔(المسلمؒ وبرقم 419) ورواہ البخاریؒ برقم 176 وابن حبانؒ برقم 1297 قال شعيب الأرنؤوط : إسناده صحيح على شرطهما وبرقم 1295 قال شعيب الأرنؤوط : حديث صحيح والحاکمؒ فی المستدرک برقم 569 وذکر”الہرۃ مثل ذلک (ای یغسلہ سبع مرات)” وقال ھذا حدیث صحیح الاسنادعلی شرط الشیخین،وتعلیق الذہبیؒ فی التلخیص، علی شرطہما، واحمدبن حنبلؒ برقم 20585 ، 8597 وفی کلیہماتعليق شعيب الأرنؤوط : إسناده صحيح على شرط الشيخين،والنسائیؒ برقم 66، 67 وفی کلیہما قال الشيخ الألباني : صحيح والترمذیؒ برقم 91 وقال ھذا حدیث حسن صحیح وقال الشيخ الألباني : صحيح ۔

ترجمہ ۔ 420 ابوہریرۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہ) سے روایت ہے کہاکہ ، “ارشاد فرمایا رسول اللہ ﷺ نے پاک ہونا (پاک کرنا اس طرح ہے) تم میں سے کسی کے برتن کا کہ جب ڈال دے کتا اس میں منہ تو دھوڈالے (وہ برتن والا اس کو) سات مرتبہ (جن میں سے )پہلی بار(دھوئے) مٹی کے ساتھ”،۔(المسلمؒ اورنمبر 419 پر) اورروایت کی ہے البخاریؒ نے نمبر 176 پراورابن حبانؒ نے نمبر 1297 پر اورکہا شعيب الأرنؤوط نے إسناد اس کی صحيح ہے دونوں (بخاریؒ اورمسلمؒ) کی شرط پرا ورنمبر 1295 پر کہا شعيب الأرنؤوط نے حديث صحيح ہےا ورالحاکمؒ نےالمستدرک میں نمبر 569 پراورذکرکیاہے”اگربلی ہو(برتن میں منہ ڈال دے )تو بھی اسی طرح کرے(سات بار ددھوئے)” اورکہا یہ حدیث صحیح الاسنادہے شرط الشیخین (بخاری ؒ اورمسلمؒ) پر،اورتعلیق الذہبیؒ کی التلخیص میں ہے، دونوں (بخاریؒ ومسلمؒ ) کی شرط پر ہے، ا وراحمدبن حنبلؒ نے نمبر 20585 ، 8597 پر اوردونوں کے بارے تعليق شعيب الأرنؤوط کی ہے إسناد اس کی صحيح ہے الشيخين کی شرط پر ،اور النسائیؒ نے نمبر 66، 67 پر دونوں کے بارے کہا الشیخ البانی ؒنے صحيح ہے اور الترمذیؒ نے نمبر 91 پر اورکہایہ حدیث حسن صحیح ہے اورکہا الشیخ البانی ؒنے صحيح ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *