Sahaba Who Swore on Death

 لا يدخل النار أحد ممن بايع تحت الشجرة

Who swore for loyalty will not go in dome of Fire

(Sahaba Who Swore on Death)

جس نے درخت کے نیچے بیعت کی آگ میں داخل نہیں ہوگا


Hadith about Death with Translation in English, Urdu & Arabic


Allah says, (Certainly Allah was well pleased with the believers when they swore allegiance to you under the tree, and He knew what was in their hearts, so He sent down tranquility on them and rewarded them with a near victory.) 18 Al-fatah. And Saeed bin Mansoor and Al-bukhari and Muslim and Ibn e Mardwaih and Al-behky in (his book) Addlaail narrate through Jabir bin Abdullah (Allah pleased with him) that we were in Hudaibiyah, one thousand and four hundred people, Rasoolullah ﷺ said about all, “You are the best (regarding faith and deeds) of all inhabitants of the earth….and Al-bukhary narrated from Salamah ibn Allah (Allah pleased with him) that he said, “I swore allegiance to Rasoolullah ﷺ under the tree.” He was asked on what he has sworn? He said,”On death (we are ready to die for the sake of Allah and his Prophet ﷺ)…and Ahmad narrated from Jabir (Allah pleased with him) and Muslim from Umm e Mubashir (Allah pleased with her) that Rasoolullah ﷺ said, “Never ever a single person out of those who swore under the tree. Loyalty (Tafseer Darul Mansoor)

قول الله تعالى : {لقد رضي الله عن المؤمنين إذ يبايعونك تحت الشجرة}۔۔۔ وأخرج سعيد بن منصور والبخاري ومسلم ، وَابن مردويه والبيهقي في الدلائل ، عَن جَابر بن عبد الله رضي الله عنه قال : كنا يوم الحديبية ألفا وأربعمائة فقال لنا رسول الله صلى الله عليه وسلم : أنتم خير أهل الأرض.۔۔۔ وأخرج البخاري عن سلمة بن الأكوع رضي الله عنه قال : بايعت رسول الله صلى الله عليه وسلم تحت الشجرة قيل : على أي شيء كنتم تبايعون قال : على الموت.۔۔۔ وأخرج أحمد ، عَن جَابر ومسلم عن أم مبشر عنه عن النَّبِيّ صلى الله عليه وسلم قال : لا يدخل النار أحد ممن بايع تحت الشجرة. ۔۔۔تفسیر الدالمنثور۔

ترجمہ۔ اللہ تعالیٰ کا قول {بلاشبہ راضی ہو گیا اللہ تعالیٰ مؤمنین سے جب وہ بیعت کررہے تھے آپ سے درخت کے نیچے} اورروایت کیاہے سعید بن منصور ؒ اور البخاریؒ اور مسلمؒ اور ابن مردویہؒ اور البیہقیؒ نے (اپنی کتاب) الدلائل میں، جابر بن عبداللہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے کہا ، ہم تھے حدیبییہ کے دن ایک ہزار اور چار سو ، پس فرمایا ہمارے لیے رسول اللہﷺ نے کہ” تم بہترین ہو تمام اہل زمین سے” ۔۔۔اور روایت کیا ہے البخاری ؒ نے سلمہ بن الاکوع رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے کہا ، بیعت کی میں نے رسول اللہ ﷺ سے درخت کے نیچے ، کہا گیا، کس بات پر آپ (لوگ ) بیعت کررہے تھے ؟کہا ، موت پر۔۔۔اور روایت کیا ہے احمد ؒ نے جابر رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے اور مسلم ؒ نے ام بشر )رضی اللہ تعالیٰ عنہا (سے (انہوں نے روایت کیاہے) رسول اللہ ﷺ سے کہ فرمایا،” نہیں داخل ہو گاآگ (دوزخ) میں ایک بھی ان میں سے جس نے بیعت کی درخت کے نیچے”۔۔۔تفسیر الدرالمنثور۔

 

Related Topics:

Allah Promised with Sahabah to Make Them Rulers

Islam will be in Power upto Twelve Successors of Quraish

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *