Touching Menstruating Wife Above Navel

Touching Menstruating Wife Above Navel

مباشرۃ الحائض فوق الازار

حائضہ بیوی سے مباشرت ازار سے اوپر


1st Hadith in English, Urdu & Arabic


Hadith No 644: Anas (Radi Allahu anhu) narrates, “Verily, The Jews used to leave their menstruating women in their sittings and in their meals and drinks”. He said, “It was discussed in front of Holy Prophet , so, revealed the verse (They ask you about menstruation, Say: They are a pollution: So keep away from women in their periods..Al-Baqarah-222) So, Rasoolullah said, “You may do every thing except copulation”. (Narrated Ibn Majah and Abu Dawood at no 258, 2165, and Nisay at no 369 and about all Sheikh Albany said, “Correct”, and Abu Ya’la at no 3533, Hussain Salim Asad said, “Chain of narrators is correct”.)

عن أنس : – أن اليهود كانوا لا يجلسون مع الحائض في بيت . ولا يأكلون ولا يشربون . قال فذكر ذلك للنبي صلى الله عليه و سلم فأنزل الله { ويسئلونك عن المحيض قل هو أذى فاعتزلوا النساء في المحيض } فقال رسول الله صلى الله عليه و سلم ( اصنعوا كل شيء إلا الجماع )(رواہ ابن ماجہؒ وابوداودؒ برقم 258 وبرقم 2165، والنسائیؒ برقم 369 وفی کل قال الشیخ البانیؒ صحیح، وابویعلیؒ برقم 3533 قال حسين سليم أسد : إسناده صحيح )

ترجمہ۔ 644 – انس (رضی اللہ تعالیٰ عنہ) سے روایت ہے کہ بے شک یہود حائضہ عورتوں کے ساتھ نہیں بیٹھتے تھے اور نہ (ان کے ساتھ) کھاتے اورنہ پیتے تھے ،کہا ، کہ جب اس کا ذکر نبی ﷺ سے کیا گیا تو اللہ نے (آیت) نازل فرمائی (وہ آپ سے حیض کے بارے سوال کرتے ہیں آپ کہہ دیں وہ گندگی ہے ، تو دوررہیں (شوہر) خواتین سے (جماع کرنے سے) حیض (کے ایام) میں) توارشادفرمایا رسو ل اللہ ﷺ نے ہر چیز کرو مگر جماع (سے بچو)”۔ (روایت کی ہے ابن ماجہؒ نے اور ابودوادؒ نے نمبر 258 پر اور 2165 پر اورالنسائیؒ نے نمبر 369 پر اوران سب کے بارے کہا الشیخ البانیؒ نےصحیح ہے اور ابویعلیؒ نے نبمر 3533پر کہا حسین سلیم اسد نے اسناد اس کی صحیح ہے


2nd Hadith in English, Urdu & Arabic


Hadith No 390: Ayesha (Razi Allah o anha) narrates, “If any one of us (Wives of Apostle ﷺ) menstruated and Rasoolullah made intention to lie with her, ordered her to tie her wrapping on her waist in heavy bleeding, and lie with her.” She said, “Who out of you has a good control upon his desire as the Apostle had (a person having loose control is not allowed even this also) “. (Narrated Al-Bukhari and Al-Muslim at no 441 and Ibn e Majah at no 635, Sheikh Albani said, “Correct”.)

عن عائشة قالت كانت إحدانا إذا كانت حائضا فأراد رسول الله صلى الله عليه وسلم أن يباشرها أمرها أن تتزر في فور حيضتها ثم يباشرها قالت وأيكم يملك إربه كما كان النبي صلى الله عليه وسلم يملك إربه (رواہ البخاریؒ والمسلمؒ برقم 441 وابن ماجہؒ 635 قال الشیخ البانیؒ صحیح) ۔

ترجمہ۔ 290 – عائشۃ (رضی اللہ تعالیٰ عنہا) سے روایت ہے کہا کہ ، ہم (ازواج رسول ﷺ) میں سے جب کو ئی حائضہ ہو جاتی، تو اگر ارادہ فرماتے رسول اللہ ﷺ اس کے ساتھ مباشرت (چہرہ ملانے یا مبارک بدن کا بعض حصہ ملا نے) کا تو حکم فرماتے اس کو کہ وہ ازار باندھ لے کثرت حیض میں بھی، پھر مباشرت فرماتے اس کے ساتھ، کہا کہ اور کون ہے تم میں سے جو اپنی خواہش پر گرفت رکھتا ہوجیسی نبی ﷺ اپنی خواہش پر گرفت رکھتے تھے (ڈھیلی گرفت والے کے لئے اتنا بھی جائز نہیں)”۔( روایت کی ہے البخاریؒ نے اورالمسلمؒ نے نمبر 441 پر اورابن ماجہؒ نے نمبر 635 پر،کہا الشیخ البانیؒ نے صحیح ہے


3rd Hadith in English, Urdu & Arabic


Mubashrat means to touch face with face or kiss or touch some of the body with body (Al-Kurtaby 2/323)

المباشرة التي هي اتصال البشرة بالبشرة كالقبلة والجثة وغيرها(القرطبیؒ 2/323

ترجمہ۔  مباشرت یہ ہے کہ ملایا جائے چہرہ کو چہرہ سے جیسے بوسہ لینا یا جسم ملانا (القرطبیؒ 2/323) ۔ 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *